12

انجن فیل ہونے کا واقعہ؛ بوئنگ 777 کے تمام طیارے گراؤنڈ کرنے کا حکم

امریکا میں دوران پرواز بوئنگ 777 کے ایک انجن میں آگ لگ گئی تھی

امریکا میں دوران پرواز بوئنگ 777 کے ایک انجن میں آگ لگ گئی تھی

 واشنگٹن: ایک طیارے کے انجن میں آگ لگنے کے بعد جہاز بنانے والی کمپنی بوئنگ نے دنیا بھر کی تمام فضائی کمپنیوں کو بوئنگ 777 کے طیارے استعمال نہ کرنے کی ہدایت کردی۔

گزشتہ روز امریکی ریاست کولوراڈو میں دوران پرواز بوئنگ 777 کے ایک انجن میں آگ لگ گئی تھی اور اس کے ٹکڑے ٹوٹ کر نیچے آبادی پر جاگرے تاہم خوش قسمتی سے طیارہ خوفناک حادثے سے بال بال بچ گیا اور پائلٹ طیارے کو ڈینیور شہر میں بحفاظت اتارنے میں کامیاب ہوگیا تھا۔

طیارہ ساز کمپنی بوئنگ نے اپنے دو انجن والے طیارے 777 ایس کو گراؤنڈ کرنے کی سفارش کردی جس پر یونائیٹڈ ایئرلائنز، کورین ایئر اور جاپان کی 2 فضائی کمپنیوں نے اپنے 68 طیاروں کو گراؤنڈ کردیا۔

امریکی وفاقی ایوی ایشن نے ڈینیور واقعے کی تحقیقات شروع کردی ہیں اور بوئنگ نے کہا ہے کہ یہ تحقیقات مکمل ہونے تک 777 طیاروں کو استعمال نہ کیا جائے۔

واضح رہے کہ 2019 میں بوئنگ 737 میکس طیاروں کے دو حادثات پیش آئے تھے جن میں 346 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔ جس کے بعد بوئنگ کمپنی اپنی ساکھ بحال کرنے کے لیے کوششیں کررہی تھی تاہم اب 777 ایس کا واقعہ اس کے لیے ایک دھچکا ثابت ہوا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں